فرانسیسی میگزین کے دفتر پر دہشت گردانہ حملہ قابل مذمت / اصغرعلی امام مہدی سلفی

دہلی:۰۱/ جنوری ۵۱۰۲ء
مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے ناظم عمومی مولانا اصغر علی امام مہدی سلفی نے اخبار کے نام جاری ایک بیان میں فرانس کے دار الحکومت پیرس میں بدھ کو ہفتہ وار میگزین ’’شارلی ایبڈو‘‘ کے دفتر پر ہوئے دہشت گردانہ حملہ کی مذمت کی ہے اور اسے غیر انسانی و غیر ذمہ دارانہ عمل قرار دیا ہی۔ 


انہوں نے کہا کہ مذکورہ میگزین کا دیرینہ اسلام مخالف اور مسلم بیزار رویہ جو کہ ہر طرح سے قابل مذمت ہے اور جس سے دنیا کے تمام مسلمانوں اور انصاف پسندوں کو اذیت پہنچی ہے اس کے باوجود اس پر اس طرح کے حملے کی اجازت نہیں دی جاسکتی اور ایک شر کے رد عمل میں دوسر ا شر پھیلانے اور قانون کو ہاتھ میں لینے کو شرعا و اخلاقا درست نہیں قرا ردیا جاسکتا اور نہ ہی کوئی مسلمان اس طرح کا مذموم کام انجام دے سکتا ہے ۔ اس طرح کے اقدامات بلاشبہ قابل مذمت ہیں۔ اسی طرح اس حملہ کے اسلام اور مسلمانوں کو بدنام کرنے کی سازش ہونے سے بھی انکار نہیں کیا جاسکتا ۔ خصوصا ایسے حالات میں جب کہ مختلف تنظیمیں اسلام اور مسلمانوں کو بدنام کرنے کے لیے سرگرم ہیں اور داعش جیسی نام نہاد تنظیم جس کی حقیقت اب منکشف ہوگئی ہے کہ اس کا اسلام سے کوئی لینا دینا نہیں ہے بلکہ وہ اسلام اور مسلمانوں کو بدنام کررہی ہی، اس لیے فرانس کی حکومت کی ذمہ داری ہے کہ اس دہشت گردانہ حملے کی غیر جانب دارانہ تحقیق کرائے اور مجرموں کو قرار واقعی سزا دی۔ تحقیقی سے پہلے کسی خواص گروہ کو مجرم قرار دینا قرین انصاف نہیں ہی۔
انہوں نے کہا کہ صحافت جسے موجودہ دور میں جمہوریت کا چوتھا ستون کہا گیا ہی۔ لوگوں کے دلوں میں نفرت پھیلا نا ، کسی کی دل آزاری کرنا، کسی کے معتقدات اور مذہبی شخصیات کی توہین کرنا اور حقائق کو توڑ مروڑ کر پیش کر کے سنسنی پھیلا نا اور لوگوں کو مشتعل کرنے کی کوشش کرنا صحافت کی اخلاقیات کے منافی ہی۔ صحافت کو مسلمہ اخلاقیات کا پاس و لحاظ رکھنا چاہئی۔ قیام امن اور انسانی بھائی چارے کے قیام کے لیے ایک دوسرے کا احترام از حد ضروری ہے

The Collective Fatwa against Daish and those of its ilk

ہمارے رسائل وجرائد

http://ahlehadees.org/modules/mod_image_show_gk4/cache/al-isteqamah2gk-is-214.jpglink
http://ahlehadees.org/modules/mod_image_show_gk4/cache/islahe-samaj2gk-is-214.jpglink
http://ahlehadees.org/modules/mod_image_show_gk4/cache/jareeda-tarjumah2gk-is-214.jpglink
http://ahlehadees.org/modules/mod_image_show_gk4/cache/the-symple-truth2gk-is-214.jpglink
«
»
Loading…