مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کا راحتی وفد زلزلہ متاثرین کی راحت رسانی کے لیے روانہ

مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے ناظم عمومی مولانا اصغرعلی امام مہدی سلفی نے اخبار کے نام جاری ایک بیان میں کہا ہے کہ وطن عزیز اور پڑوسی ملک نیپال میں آئے تباہ کن زلزلے سے متاثرین کی راحت رسانی کے لیے مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کا ایک راحتی وفد آج متاثرہ مقامات کے لیے روانہ ہوا۔ جووہاں پہنچ کر متاثرین کے مابین ریلیف و راحتی اشیاءتقسیم کرے گا اور وہاں کی صحیح صورت حال کا جائزہ لے کر مرکز کو آگاہ کر ے گا تاکہ متاثرین کی باز آباد کاری کے لیے مرکز سے ہر ممکن تعاون ارسال کیا جاسکے۔

پریس ریلیز کے مطابق مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے اس راحتی وفد کی سربراہی مولانا محمد علی مدنی ناظم صوبائی جمعیت اہل حدیث بہار کررہے ہیں اور اس وفد میں مولانا محمد ہاشم سلفی اور مولانا کلیم اللہ انصاری سلفی وغیرہ شریک ہیں۔

ناظم عمومی نے اپنے بیان میں عوام وخواص سے اپیل کی ہے کہ مصیبت کی اس گھڑی میں وطن عزیز اور پڑوسی ملک کے زلزلہ متاثرین کی راحت رسانی اور باز آباد کاری کے لیے اپنا بھر پور تعاون پیش کریں۔

واضح ہو کہ مورخہ ۵۲/ اپریل کو پڑوسی ملک نیپال میں ایک بڑا زلزلہ آیا تھا جس سے بہا ، یوپی اور مغربی بنگال وغیرہ صوبوں کے متعدد علاقے بھی متاثر ہوئے ہیں۔ مذکورہ وفد ان تمام علاقوں کا دورہ کرے گا۔

جاری کردہ

مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند

مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کی اس عظیم ملی ، دینی وادبی شخصیت کے انتقال پر تعزیت
دہلی:۶جولائی۴۱۰۲ء
مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے ناظم عمومی مولانا اصغرعلی امام مہدی سلفی نے اخبار کے نام جاری ایک بیان میں خواجہ قطب الدین مونس رکن عاملہ وشوریٰ مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے انتقال پر غم وافسوس کا اظہار کیاہے اور آپ نے فرمایا کہ پوری جماعت خصوصا تمام اراکین و متعلقین جمعیت انتہائی سوگوار ہیں ۔ اور اسے جماعت و ملت کا عظیم خسارہ قرار دیا ہے ۔
پریس ریلیز کے مطابق خواجہ قطب الدین مونس ۵ـ۶ تاریخ کے درمیانی شب میں تقریبا بارہ بجے ایک طویل علالت کے بعد اللہ کو پیارے ہوگئی۔ انا للہ وانا الیہ راجعون۔ موصوف صوم و صلاۃ کے سخت پابند تھے ۔ دینی و ملی کاموں میں پیش پیش رہا کرتے تھے ۔ مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے بڑے فعال رکن تھی۔ آپ ہمہ وقت جمعیت و جماعت کی ترقی کے لیے کوشاں رہتے تھے اور اس کی بے لوث خدمات انجام دیتے تھے ۔جمعیت اہل حدیث ایک عظیم و مخلص رکن سے محروم ہوگئی ہے اور اس عظیم عمارت کا ایک اہم ستون گرگیا ہی۔

دہلی۸۲جون۴۱۰۲ء

مرکزی اہل حدیث رویت ہلال کمیٹی دہلی سے جاری اخباری بیان کے مطابق آج مورخہ ۲۸جولائی۲۰۱۴ء بمطابق ۲۹شعبان ۵۳۴۱ھ بروز سنیچر مرکزی اہل حدیث رویت ہلال کمیٹی کی ایک میٹنگ ہوئی اور ملک کے کسی بھی حصے میں چاند کی رویت کی مصدقہ و مستند خبر موصول نہ ہونے کے پیش نظر مرکزی اہل حدیث رویت ہلال کمیٹی نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ ان شاء اللہ ۳۰جون ۴۱۰۲ ء بروز پیر رمضان کی پہلی تاریخ ہوگی۔

 جاری کردہ

مرکزی اہل حدیث رویت ہلال کمیٹی

دہلی،۱۲مئی۔مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے ناظم عمومی مولانا اصغرعلی امام مہدی سلفی کی ایک پریس ریلیز کے مطابق جماعت اہل حدیث کے معروف عالم دین اوربے باک خطیب، مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے ناظم شعبۂ تنظیم اور صوبائی جمعیت اہل حدیث مغربی یوپی کے ناظم جناب مولاناہارون سنابلی کی والدہ محترمہ کا آج میرٹھ میں دوپہردوبجے بعمراکہترسال انتقال ہوگیا ۔انا للہ وانا الیہ راجعون۔
ایک ماہ قبل ان کے کولہے کی ہڈی ٹوٹ گئی تھی جس کا کامیاب آپریشن ہواتھا اوراس کے بعد رو بہ صحت تھیںلیکن کمزوری بدستور رہی پھر اچانک طبیعت بگڑی اورمولائے حقیقی سے جا ملیں۔آپ بڑی ہی دیندار خاتون تھیںاور اولاد کی دینی خطوط پر بہترین تربیت کی۔ ان کی حسن تربیت ہی کا نتیجہ تھا کہ جماعت کو ایک مخلص عالم دین اورشعلہ بیاں خطیب اوربہترین منتظم ملا ۔ان کی دینی خدمات ان کے لئے صدقہ جاریہ ہونگی ۔ان شاء اللہ
ناظم عمومی نے اپنے اخباری بیان میں ان کے پسماندگان ومتعلقین نیزجملہ سوگواران سے اظہار تعزیت کیا۔ نماز جنازہ بعد نماز مغرب ادا کی جائے گی اورشہر کے قبرستان میں تدفین ہوگی

دہلی :۳مئی ۴۱۰۲ء
مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے ناظم عمومی مولانا اصغرعلی امام مہدی سلفی نے اخبار کے نام جاری ایک بیان میں آسام میںبوڈو شدت پسندوں کے ذریعہ مسلم آبادی پر حملہ اور اس میں تقریبا ۶۲ افراد کی ہلاکت کی پرزور مذمت کی ہے اور اسے نہایت غیر انسانی عمل قرار دیا۔
انہوں نے کہا کہ آسام میں وقتا فوقتا ایک مخصوص فرقے کے خلاف بوڈو انتہا پسندوں کے ذریعہ جان لیوا حملے ہوتے رہتے ہیں لیکن حکومت اس مسئلہ کا پائیدار حل نہیں نکالتی۔
ناظم عمومی نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ بوڈو انتہا پسندوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے اور غیر بوڈو اور اقلیتی فرقہ کے لوگوں کے جان و مال اور عزت و آبرو کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے ۔
مولانا اصغر علی امام مہدی سلفی نے اپنے بیان میں گذشتہ دنوں چنئی ریلوے اسٹیشن پر ہوئے دھماکے کی بھی مذمت کی ہی۔ اور اسے بزدلانہ عمل قرار دیا


مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے ناظم عمومی مولانا اصغر علی امام مہدی سلفی کا تعزیتی پیغام
دہلی :۳مئی ۴۱۰۲ء
مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے ناظم عمومی مولانا اصغرعلی امام مہدی سلفی نے اخبار کے نام جاری ایک بیان میںمعروف عالم دین اور درجنوں کتابوں کے مصنف اور کیرالا میں مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کی صوبائی یونٹ ندوۃ المجاہدین کیرالا کے ناظم اعلیٰ مولانا عبدالقادر زین الدین الفاروقی کے سانحہ انتقال پر گہرے رنج و افسوس کا اظہار کیا اور اسے ملک و ملت ، جماعت اور انسانیت کا بڑا خسارہ قرار دیا ہی۔
انہوں نے کہا کہ مولانا عبدالقادر زین الدین الفاروقی کو اللہ تعالیٰ نے بڑی خوبیوں سے نوازا تھا اور وہ ملک وملت ، جماعت اور انسانیت کی خدمت کے حوالے سے ہمیشہ کوساں رہتے ہیں ۔ آج صبح مختصر علالت کے بعد بعمر بیاسی (2) سال ان کا انتقال ہوگیا۔ اور شام پانچ بجے ان کی تدفین عمل میں آئی۔
موصوف ندوۃ المجاہدین کیرالا کے ۱۷۹۱ء میں نائب ناظم بنائے گئے اور اس عہدے پر بائیس سال تک فائز رہے بعد آزاں ۳۹۹۱ء میں ندوۃ المجاہدین کیرالا کے جنر ل سکریٹری منتخب ہوئے اور تادم واپسیں اس منصب پر بر قرار رہی۔ آپ کو ملیالم کے علاوہ اردو ، عربی ، انگریزی زبانوں میںمہارت حاصل تھی۔ آپ نے درجنوںکتابیں ملیالم زبان میں تصنیف فرمائیں۔آپ ندوۃ المجاہدین کیرالا کے اعلیٰ تعلیمی ادارے جامعہ ندویہ کے مینجنگ ٹرسٹی اور جامعہ سلفیہ کیرالا کے وائس چانسلر بھی تھی۔
پسماندگان میںدو بیٹے اور چار لڑکیاں اور اہلیہ ہیں۔ پریس ریلیز کے مطابق مرکزی جمعیت اہل حدیث ہند کے امیر حافظ محمد یحییٰ دہلوی، ناظم مالیات الحاج وکیل پرویز، نائب امراء، نائب نظماء و دیگر ذمہ داران و کارکنان نے بھی مولانا عبدالقادر مولوی کے انتقال پر رنج و افسوس کا اظہار کیا ہے اور دعا گو ہیں کہ بار الہ ان کی مغفرت فرما، ان کی خدمات قبول فرما، ان کو جنت الفردوس میں اعلیٰ مقام عطا فرما اور پسماندگان کو صبر جمیل کی توفیق ارزانی فرما۔

دہلی:۱۱/جنوری ۴۱۰۲ء
صوبائی جمعیت اہل حدیث دہلی کے امیر مولانا عبدالستار سلفی نے اخبار ی ایک بیان میں اطلاع دی ہے کہ عالم اسلام کے معروف اسکالر، باکمال داعی اوربے مثال خطیب حضرت مولانا ظفرالحسن مدنی حفظہ اللہ وتولاہ صوبائی جمعیت اہل حدیث دہلی کی دعوت پرشارجہ سے کل مورخہ ۲۱جنوری ۴۰۱۲ء بروزاتوار ۳بجے دن کی فلائٹ سے دہلی تشریف لارہے ہیں ۔جوکل ہی بعدنماز عشاء شہزادہ باغ اندرلوک مسجداہل حدیث عبدالرحمن مان والی میں خطاب عام فرمائیںگی۔ان شاء اللہ۔
پریس ریلیز کے مطابق اس خطاب عام کااہتمام صوبائی جمعیت اہل حدیث دہلی نے کیاہی۔ خطاب کے بعد سوال وجواب کی مجلس منعقد کی جائے گی۔جس میں قرآن وحدیث کی روشنی میں حاضرین کے استفسار کا جواب دیا جائے گا۔واضح رہے کہ صوبائی جمعیت اہل حدیث دہلی کے ذریعہ مرکزی جمعیت اہل حدیث ہندکی نگرانی میں صوبے کے اندر دعوت واصلاح کاعمل بحمد اللہ جاری ہے اوریہ پروگرام اسی اصلاحی ودعوتی سلسلے کی ایک اہم کڑی ہے

Page 3 of 8

The Collective Fatwa against Daish and those of its ilk

ہمارے رسائل وجرائد

http://ahlehadees.org/modules/mod_image_show_gk4/cache/al-isteqamah2gk-is-214.jpglink
http://ahlehadees.org/modules/mod_image_show_gk4/cache/islahe-samaj2gk-is-214.jpglink
http://ahlehadees.org/modules/mod_image_show_gk4/cache/jareeda-tarjumah2gk-is-214.jpglink
http://ahlehadees.org/modules/mod_image_show_gk4/cache/the-symple-truth2gk-is-214.jpglink
«
»
Loading…